80 فیصد نتائج مکمل، صدر اردوان 50.66 فیصد ووٹ لیکر آگے

302

ابتدائی نتائج میں صدر اردوان 55.03 فیصد ووٹوں کےساتھ آگے ہیں: ترک میڈیا—فوٹو: فائل

ترکیہ کے صدارتی اور پارلیمانی انتخابات کے بعد گنتی کا عمل شروع ہو گیا اور ابتدائی نتائج کے مطابق صدر اردوان کو مخالف امیدواروں پر برتری حاصل ہے۔

ترک میڈیا رپورٹس کے مطابق ترکیہ میں صدارتی انتخابات میں 80 فیصد ووٹوں کی گنتی مکمل ہو گئی ہے۔

اب تک کے نتائج کے مطابق صدر رجب طیب اردوان 50.66 فیصد ووٹ لیکر آگے جبکہ ان کے مخالف امیدوار کمال قلیچ دار اوغلو 43.53 فیصد ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر ہیں جبکہ تیسرے امیدوار سنان اوغان اب تک 5.32 فیصد ووٹ لے سکے ہیں۔

واضح رہے کہ آج ترکیہ میں صدارتی اور پارلیمانی انتخابات کیلئے ووٹنگ کا عمل مقامی وقت کے مطابق صبح eight بجے  سے شام 5 بجے تک جاری رہا۔

اس کے علاوہ پارلیمانی انتخابات میں بھی 69 فیصد ووٹوں کی گنتی مکمل ہوچکی ہے اور اب تک کے نتائج کے مطابق 600 کے ایوان میں صدر اردوان کی جسٹس اینڈ ڈویلپمنٹ پارٹی 270 نشستیں جیت چکی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ترکیہ کی تاریخ میں پہلی بار24 پارٹیاں اور 151 آزاد امیدوار انتخابات میں حصہ لے رہے ہیں، ترکیہ میں ساڑھے 6 کروڑ سے زائد ووٹرز رجسٹرڈ ہیں۔

صدارتی انتخاب میں ترک صدر طیب اردوان اور اپوزیشن رہنما کمال قلیچ داراوغلو کےدرمیان سخت مقابلہ متوقع ہے۔

50 فیصد سے زائد ووٹ نہ لینے پر 28 مئی کو انتخابات کا دوسرا مرحلہ ہوگا، مختلف اندازوں کے مطابق 6 اپوزیشن جماعتوں کے مشترکہ امیدوارکمال قلیچ داراوغلو کو اردوان کے مقابلے میں ہلکی برتری مل سکتی ہے۔

Supply hyperlink